پاکستان اور کمبوڈیا میں دوستانہ اور تعاون پر مبنی تعلقات قائم ہیں اور ضرورت اس امر کی ہے کہ تمام شعبوں میں ان تعلقات کو مزید تقویت دی جائے۔ ~ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری

ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے وزیراعظم کمبوڈیا ہن سین سے ملاقات کی۔ ملاقات میں علاقائی صورتحال، دو طرفہ تعلقات اور دیگر باہمی امور پر تبادلہء خیال کیا گیا۔ وزیراعظم ہن سین نے ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وہ پاکستان کے انتہائی مشکور ہیں کہ اتنا بڑا وفد ایشیاء پیسیفک سربراہی اجلاس 2019 میں شرکت کیلئے کمبوڈیا بھیجا۔ انہوں نے انتہائی مسرت کا اظہار کیا کہ پاکستان وہ واحد ملک تھا کہ جس نے سب سے پہلے کمبوڈیا کی آزادی کو تسلیم کیا۔ وزیراعظم ہن سین نے کہا کہ ان کا پیغام وزیراعظم عمران خان کو پہنچایا جائے کہ وہ کمبوڈیا کا دورہ کریں۔

ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے ایشیاء پیسیفک سربراہی اجلاس 2019 میں شرکت کیلئے پہلی مرتبہ کمبوڈیا کے دورے پر مسرت کا اظہار کیا اور پاکستانی وفد کے گرمجوشی سے استقبال اور میزبانی پر وزیراعظم ہن سین کا شکریہ ادا کیا۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ پاکستان اور کمبوڈیا میں دوستانہ اور تعاون پر مبنی تعلقات قائم ہیں اور ضرورت اس امر کی ہے کہ تمام شعبوں میں ان تعلقات کو مزید تقویت دی جائے۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان دوطرفہ اور علاقائی تناظر میں مملکت کمبوڈیا کے ساتھ اپنے تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے۔ پاکستان کمبوڈیا کو آسیان میں ایک اہم ملک تصور کرتا ہے۔ انھوں نے مزید کہا کہ وہ اس موقع سے فائدہ اٹھاتے ہوئے جولائی 2018 میں منعقدہ کامیاب انتخابات پر وزیراعظم ہن سین کو مبارکباد پیش کرتے ہیں اور ان کی زیرِ قیادت کمبوڈیا میں آنے والے سیاسی استحکام اور ہونے والی اقتصادی ترقی دیکھ کر انہیں بیحد خوشی ہوئی ہے۔

ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے کہا کہ پارلیمانی تعلقات کو مزید تقویت دینے میں دوروں کے تبادلے کلیدی کردار ادا کرتے ہیں اور پاکستان باہمی طور پر طے پانے والی تاریخوں پر کمبوڈین پارلیمانی وفود کے متوقع دورے کا منتظر ہے۔ تاکہ دو طرفہ تعلقات کو مزید فروغ ملے۔

ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے وزیراعظم کمبوڈیا ہن سین کو دونوں ممالک کے درمیان تجارت کے فروغ کیلئے آلات جراحی، سیالکوٹ میں تیار کردہ اسپورٹس کا سامان ودیگر پاکستان سے منگوانے پر زور دیا جس سے کمبوڈیا کی مارکیٹ کو فائدہ حاصل ہو گا۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی اور وزیراعظم ہن سین کے درمیان دونوں ممالک کے درمیان ثقافتی طائفوں اور طلباء کے گروپوں کے تبادلے کے حوالے سے بھی تبادلہء خیال ہوا۔

علاقائی صورتحال کے حوالے سے ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے وزیراعظم کمبوڈیا ہن سین کی 5 اگست 2019 کو بھارتی حکومت کیجانب سے مقبوضہ کشمیر میں یکطرفہ طور پر اٹھائے گئے اقدامات کے نتیجے میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی سنگین صورتحال کیطرف توجہ دلواتے ہوئے کہا کہ اقوامِ متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں میں کشمیر کو متنازع علاقہ تسلیم کیا گیا ہے۔ بھارتی مقبوضہ کشمیر میں لاک ڈاؤن، کرفیو اور مواصلات پر پابندی کیوجہ سے کشمیریوں کے بنیادی حقوق اور آزادی کی خلاف ورزی کی جا رہی ہے۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی نے اس خواہش کا اظہار کیا کہ کمبوڈیا بھارت کے ساتھ اپنے اچھے تعلقات کو استعمال کرتے ہوئے 5 اگست 2019 کو بھارت کیجانب سے یکطرفہ اختیار کردہ اقدامات منسوخ کرائے اور جموں و کشمیر سے متعلق اقوامِ متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کی تعمیل کی جائے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *